لندن میں اہم پاکستانی شخصیت کے گھر پر چھاپہ

تصویر

متحدہ قومی موومنٹ کے غیر فعال رہنما ڈاکٹر عمران فاروق قتل کی تحقیقات کے سلسلے میں لندن میں 2 گھروں پر چھاپہ مارا گیا ہے۔

یاد رہے کہ ڈاکٹر عمران فاروق 16 دسمبر 2010ء کو اسی علاقہ میں قتل ہوئے تھے۔

مقامی وقت کے مطابق صبح 6 بجے شمال مغربی لندن کے رہائشی علاقوں کو گھیرے میں لے کر 2 گھروں میں تلاشی کا عمل شروع کیا گیا اور 5 گھنٹے سے زائد وقت گزرنے کے باوجود پولیس تاحال وہاں موجود ہے۔

مذکورہ گھر اہم پاکستانی شخصیت کے بتائے جارہے ہیں۔

لندن کی انسداد دہشت گردی فورس اس چھاپہ مار کارروائی کی نگرانی میں کر رہی ہے۔

پولیس کے مطابق ڈاکٹر فاروق قتل کیس میں اب تک 6 ہزار ڈاکومنٹس کا جائزہ لیا گیا ہے اور تحقیقات میں پیش رفت ہورہی ہے۔

خیال رہے کہ لندن پولیس متعدد بار اس تحقیقات میں مدد کے لیے لوگوں سے اپیل کرچکی ہے۔ پولیس کا خیال ہے کہ عمران فاروق کے قاتلوں کے بارے میں کسی نہ کسی کو معلوم ہوگا۔

اس سے قبل برطانوی پولیس کا یہ بیان بھی سامنے آچکا ہے کہ ایم کیو ایم کے غیر فعال رہنما اپنی علیحدہ جماعت بنانا چاہتے تھے اور ان کے قتل میں وہی افراد ملوث ہیں جو نہیں چاہتے تھے کہ عمران فاروق نئی پارٹی بنائیں۔

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s