تصویر

لاہور ہائی کورٹ نے منڈی بہاوالدین کی پولیس چوکی میں نوجوان لڑکی سے پولیس کی مبینہ اجتماعی زیادتی کے الزام پرچوکی انچارج اوراسکے ساتھیوں کے خلاف مقدمہ درج کرنے کاحکم دیدیا۔ عدالت نے قراردیاکہ پولیس والے اپنے پیٹی بھائیوں کوبچانے کیلئے کسی بھی حد کوپارکرجاتے ہیں مگرعدالتیں آنکھیں بندنہیں کرسکتیں۔مریم بی بی کے وکیل عارف گوندل نے بتایاکہ چوکی بھیرووال، منڈی بہاوٴالدین کے سب انسپکٹر اعجازاحمد نے انکی موکلہ کو کو چوکی میں بند کرکے اجتماعی زیادتی کانشانہ بنایا۔سیشن عدالت نے بھی ملزموں کیخلاف مقدمہ درج کرنے کاحکم دیامگرپولیس اس پر عمل نہیں کررہی۔عدالت نے متعلقہ ایس ڈی پی اوکوطلب کرکے حکم دیاکہ ملزموں کیخلاف فوری مقدمہ درج کیا جائے۔