الطاف حسین نے عملی سیاست کا آغاز بطور طالب علم کیا

تصویر متحدہ قومی موومنٹ کے بانی چیئرمین الطاف حسین 17 ستمبر 1953ء کو کراچی میں ایک غریب گھرانے میں پیدا ہوئے۔ ان کے دادا مولانا مفتی رمضان حسین آگرہ (یوپی) کے مفتی اور جید عالم دین تھے۔ والد انڈیا میں سٹیشن ماسٹر تھے۔ پاکستان کی آزادی کے بعد ہجرت کرکے پاکستان آگئے۔ الطاف حسین نے مہاجر طلبہ کو منظم کرکے 11 جون 1978ء کو آل پاکستان مہاجر سٹوڈنٹس آرگنائزیشن کی بنیاد رکھی اور اس کے بانی چیئرمین رہے۔ الطاف حسین کو 1979ء میں گرفتار کر لیا گیا اور نو ماہ تک قید میں رہے۔ رہائی کے بعد کورنگی، گولیمار، ملیر، نیو کراچی، ایف بی ایریا ناظم آباد غرضیکہ تمام کراچی میں ایم کیو ایم کا طوطی بولنے لگا۔ 18 مارچ 1984ء کو ایم کیو ایم کا اعلان ہوا۔ کراچی میں لسانی فسادات کا آغاز ہوا تو ایم کیو ایم بڑی سیاسی جماعت کی حیثیت سے سامنے آئی۔ فسادات کے دوران ہی الطاف حسین نے دوسرے شہروں کے دورے کئے اور ایم کیو ایم کے لئے اخلاقی حمایت حاصل کی۔ یوں ایم کیو ایم ہندوستان سے آنے والے مہاجرین کی سب سے بڑی سیاسی جماعت بن گئی۔ جولائی 1997ء میں ایم کیو ایم کا نام مہاجر قومی مومنٹ سے تبدیل کرکے متحدہ قومی مومنٹ رکھا گیا۔ 2002ء کے انتخابات کے بعد الطاف حسین کی پارٹی نے مسلم لیگ (ق) کے ساتھ اتحاد کیا اور حکومت میں شامل ہوئی۔ یوں ان کے بہت سے جلا وطن رہنماء واپس آئے۔ سندھ کے گورنر کا عہدہ بھی ان کی پارٹی کو ملا۔ 2008ء کے انتخابات میں پاکستان پیپلز پارٹی کے ساتھ ان کا اتحاد ہوا۔ یوں الطاف زرداری بھائی بھائی کا نعرہ سامنے آیا۔ الطاف حسین آج بھی لندن میں مقیم ہیں اور وہاں پارٹی کے انٹرنشینل سیکرٹریٹ سے پارٹی کے معاملات چلا رہے ہیں۔

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s