جاپانی شہر ہیروشیما پر ایٹم بم گرائے جانے کو آج 69 برس گزرگئے

جاپانی شہر ہیروشیما پر ایٹم بم گرائے جانے کو آج 69 برس گزرگئےجاپانی شہر ہیرو شیما پر ایٹم بم گرائے جانے کو آج انہتربرس گزر گئے۔ کسی انسانی آبادی پر پھینکا جانے والا یہ پہلا جوہری بم تھا۔ اس کی حدت اور تابکار مادوں سے ایک لاکھ چالیس ہزار جاپانیوں کو موت کے گھاٹ اتاردیا گیا تھا۔ اس دن کی مناسبت سے ہیروشیما میں خصوصی سوگوار تقریب کا اہتمام کیا گیا۔
دنیا میں پہلا ایٹم بم چھ اگست انیس سو پینتالیس کو پھینکا گیا۔ اس کا نشانہ جاپانی شہر ہیروشیما تھا اور دوسرا جوہری بم تین دن بعد ایک اور جاپانی شہر ناگاساکی پر گرایا گیا۔ ایٹم بم سے لاکھوں انسان چند لمحوں میں جان سے ہاتھ دھو بیٹھے اور لاکھوں متاثر ہوئے تھے۔ جاپان میں آج کے دن اس حوالے سے یادگاری تقریبات منعقد کی گئیں۔ جوہری بم سے مرنے والوں کو یاد کیا گیا اور پھول رکھے گئے۔ ہزاروں افراد نے شریک ہو کر جوہری ہتھیار سازی کے خلاف نعرے لگائے۔ جاپان میں امریکی سفیر کیرولین کینیڈی نے بھی تقریب میں شرکت کی۔
دنیا بھر سے بے شمار ملکوں کے وفود چھ اگست کی تقریب میں شریک ہوتے ہیں۔ جاپان نے پندرہ اگست انیس سو پینتالیس کو اپنے تمام ہتھیار پھینک دیے تھے۔ انہتر برس بعد آج ایک مرتبہ پھر یہ سوال گردش کررہا ہے کہ امریکا کی طرف سے ایٹم بم کا استعمال درست فیصلہ تھا یا نہیں۔ دنیا کو ایٹمی ہتھیاروں سے پاک بنانے کی امریکی کوشش ابھی تک کوئی خاص اثر نہیں دکھا سکی ہے تاہم مستقبل میں اس حوالے سے اہم پیشرفت متوقع ہے۔

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s