گال ٹیسٹ،55رنز کے اسکور پر پاکستان کی تیسری وکٹ بھی گر گئیسری لنکا میں پاکستانی بلے بازوں نے لنکن ٹائگرز کے خلاف بڑا مایوس کن آغاز کیا، صرف 55 رنز کے اسکور پر پاکستان اپنی تین قیمتیں وکٹیں گنوا بیٹھا۔

گال ٹیسٹ کے پہلے روز پاکستان نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کرنا مناسب سمجھا اور اپنے بہترین مہرے میدان میں اتار دیئے، کیا خبر تھی کہ بہترین اسکور کے خواب دیکھنے والوں کیلئے ابتدائی بیٹنگ لائن ریت کی دیوار ثابت ہوگی۔ پاکستان کی پہلی وکٹ صرف 4 رنز پر پی گر گئی، جب احمد شہزاد 4رنز کے اسکور پر ساد کی گیند پر کلین بولڈ ہوئے، پاکستان کی دوسری وکٹ جلد ہی 19 رنز پر ڈھیر ہوگئی، جب خرم منظور دوبار ساد کی کا شکارے بننے۔

گرتی دیوار کو سنبھالنے کیلئے اظہر علی وکٹ پر موجود رہے مگر زیادہ دیر سری لنکا کے بولرز کا سامنا نہ کرسکے اور 56 رنز کے اسکور پر رنگانا ہیراتھ کے ہاتھوں شکار بن کر واپس پویلین کی طرف چلتے بننے۔

قومی ٹیم میں کوئی تبدیلی نہیں کی گئی، کپتان مصباح الحق نے میچ میں بہترین کارکردگی دکھانے کے عزم کا اظہار کیا ہے، ٹاس کے بعد گفت گو میں کپتان مصباح الحق کا کہنا تھا کہ بہترین پرفارمس دکھانے کی پوری کوشش کرینگے، سری لنکا کے خلاف سیریز کیلئے سخت محنت کی ہے، تربیتی سیشن میں بھی کھلاڑیوں کی فٹنس پر خصوصی توجہ دی گئی۔ واضح رہے کہ قومی ٹیم کے ٹیسٹ اسکواڈ میں یونس خان ، خرم منظور ، اظہر علی ، اسد شفیق ، سرفراز احمد ، عبد الرحمان ، سعید اجمل ، محمد طلحہ اور جنید وغیرہ شامل ہیں۔