امریکا میں ٹرمپ مخالف مظاہرے، 200 افراد گرفتاراور درجنوں گاڑیاں نذرآتش

امریکا میں صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے خلاف مختلف ریاستوں میں پرتشدد مظاہروں کا سلسلہ جاری ہے جنہیں روکنے کے لئے پولیس نے 200 سے زائد افراد کو حراست میں لے لیا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی حلف برداری کے بعد سے ہزاروں افراد واشنگٹن میں سراپا احتجاج ہیں جب کہ مشتعل مظاہرین نے درجنوں گاڑیوں کو نذر آتش کرتے ہوئے متعدد دکانوں کے شیشے توڑ دیئے اور پولیس سے جھڑپوں کے دوران 6 اہلکار بھی شدید زخمی ہوئے۔ پولیس نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لئے آنسو گیس کی شیلنگ بھی کی جس کے باوجود مظاہرین سڑکوں پر موجود ہیں تاہم سیکیورٹی فورسز نے مختلف علاقوں سے 200 سے زائد مظاہرین کو حراست میں لے لیا۔

مظاہرین کی جانب سے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے اعزاز میں نکالی گئی صدارتی پریڈ کو ناکام بنانے کے لئے بھرپور انتظامات کئے گئے اور جب وائٹ ہاؤس کے باہر پولیس کی جانب سے ریلی نکالی گئی تو مشتعل افراد نے پتھراؤ شروع کردیا جس کے نتیجے میں کئی اہلکار زخمی ہوئے جب کہ مظاہرین نے وائٹ ہاؤس کے سامنے فرینکلن اسکوائر پارک کے قریب کھڑی گاڑیوں کو بھی نذر آتش کردیا۔

سٹی پولیس چیف پیٹر نیوزہیم کا کہنا ہے کہ پولیس کی جانب سے بھرپور کوشش کی گئی کہ طاقت کا استعمال نہ کیا جائے لیکن مظاہرین نے آنسو گیس اور مرچی کے اسپرے کرنے پر مجبور کیا جب کہ اب تک نقص امن کا باعث بننے والے 217 افراد کو حراست میں لیا جاچکا ہے جنہیں عدالت کے روبرو پیش کیا جائے گا۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s