آئی پی ایل کھیلنے پر یومیہ ساڑھے تین ہزار جرمانہ دینا ہو گا

انگلش کرکٹ بورڈ نے انڈین پریمیئر لیگ میں اپنے کھلاڑیوں کی شرکت روکنے کیلئے سخت قدم اٹھاتے ہوئے یومیہ ساڑھے تین ہزار پاؤنڈ جرمانہ عائد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

برطانوی جریدے کے مطابق انگلینڈ نے سینٹرل کانٹریکٹ یافتہ کھلاڑیوں پر یہ پابندی لگانے کا فیصلہ کیا ہے تاکہ وہ سخت سیزن سے قبل مکمل آرام کر سکیں اور انگلینڈ کی کاؤنٹی کو وقت دیں لیکن انگلینڈ کے سخت ٹورز سے قبل انڈین پریمیئر لیگ منعقد ہو گی اور اس میں پرکشش معاوضے کے سبب انگلش کھلاڑیوں کی اس میں شرکت متوقع ہے۔

لیگ کیلئے جن کھلاڑیوں کا چناؤ ہونے کا امکان ہے ان میں سب سے بڑا نام آل راؤنڈر بین اسٹوکس کا ہے اور انگلینڈ کو خدشہ ہے کہ کہیں مایہ ناز کرکٹر لیگ کے دوران کسی انجری کا شکار نہ ہو جائیں۔

اسٹوکس نے آئی پی ایل کیلئے اپنی بنیادی رقم دو لاکھ 38 ہزار پاؤنڈ مقرر کی ہے اور کئی فرنچائز ان کی خدمات حاصل کرنے میں دلچسپی رکھتی ہیں لیکن اگر بنیادی رقم پر ان کی نیلامی ہوتی ہے تو وہ فیس اور ٹیکس کی مد میں اپنی آدھی کمائی سے محروم ہو جائیں گے۔

بیٹنگ، باؤلنگ اور فیلڈنگ میں یکساں مہارت کے سبب اسٹوکس کو لیگ میں مہنگے داموں خریدے جانے کا امکان ہے اور رائل چیلنجر بنگلور کے کپتان ویرات کوہلی نے ٹیم مینجمنٹ کو ہدایت کی ہے کہ وہ جارح مزاج بلے بازوں کو ٹیم کا حصہ بنانے کیلئے آخری حد تک جائے۔

پانچ اپریل سے شروع ہونے والی انڈین پریمیئر لیگ کیلئے نیلامی کے عمل کا آغاز چار فروری کو ہو گا جہاں انگلینڈ کی محدود اوورز کی ٹیم کے کپتان آئن مورگن اور جیسن رائے نے نیلامی کیلئے اپنے نام پیش کیے ہیں جبکہ سیم بلنگز اور جوز بٹلر پہلے ہی لیگ کا حصہ ہیں۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s